Wednesday, May 7, 2014

PTI Supporter blasts Saleem Safi, Amir Liaquat & Ansar Abbasi of Geo

By: Sialkotian Pakistan
.
یہ بات حقیقت ہے کہ صحافت کسی بھی ریاست کا اہم ترین ستون ہوتا ہے لیکن اگر اسی ستون کی بنیادیں کرپشن، بلیک میلنگ ، وطن دشمنی ، اور ٹیکس چوری جیسے کارناموں سے دیمک زدہ ہوں تو پھر اس ملک کا الله ہی حافظ ہے ۔
انصار عباسی صاحب ویسے تو بہت ایماندار اور الله لوگ صحافی لگتے ہیں جس طرح یہ نظریہ پاکستان اور اسلامی اقدار کی بات کرتے ہیں آپ یقین نہیں کر سکتے کہ عباسی صاحب جنگ گروپ جیسے ادارے میں کام کرتے ہیں انکا جیو چینل جو کہ اس ملک میں فحاشی عریانی اور بے حیائی کو فروغ دینے والا سب سے پہلا چینل ہے اور جس کے بعد انکی دیکھا دیکھی باقی دوسرے الیکٹرانک میڈیا کے چینلز نے پیچھے مڑ کر نہیں دیکھا۔
ویسے کہنے تو تو عباسی صاحب ایک ایماندار صحافی ہیں اور یہ تحقیقی صحافی ہیں دوسروں پر تو یہ قدغنیں لگاتے رہتے ہیں لیکن کیا انہوں نے اپنی منجی کے نیچے کبھی ڈانگ پھیری ہے ؟
انکا ادارہ جس سے یہ تنخواہ اور مراعات لیتے ہیں کیا عباسی صاحب کی تحقیق اس کی اجازت نہیں دیتی کہ وہ جنگ گروپ پر بھی تحقیق کریں جس کہ اربوں روپے کا ڈیفالٹر ہے ؟
کیا انکی تحقیق صرف دوسروں تک ہی محدود ہے ؟ 
عباسی صاحب کا ساتھ ہم نے ہمیشہ دیا ہے جب انہوں نے لنڈے کے انگریز دیسی لبرلز کو حرف تنقید بنایا ہے تو ہم نے بڑھ چڑھ کر انکی مدد کی اور انکا ساتھ دیا لیکن دکھ اس بات کا ہے کہ یہ اس ادارے سے تنخواہ لیتے ہیں جو کہ نظریہ پاکستان کی دھجیاں بکھیرتا ہے جس چینل پر فحاشی کی حدیں ختم ہوتی ہیں یہ خود اس سے تنخواہ لیتے ہیں اور اپنے بچوں کے منہ میں بھی اسی تنخواہ سے نوالہ ڈالتے ہیں۔
عباسی صاحب آپ فرماتے ہیں کہ عمران خان اور تحریک انصاف کے نوجوان جیو اور جنگ گروپ کو غدار کے فتوے دے رہےہیں۔
جناب عالی ہم بات کرتے ہیں تو ثبوت کے ساتھ۔

آپ بتائیں کہ اجمل قصاب کو پاکستانی ثابت کرنے والا چینل کون سا تھا ؟
آپ ہی بتا دیں کہ باغی بلوچ لیڈر جو کہ سوئٹزرلینڈ میں بیٹھا ہے اسکے انٹریو نشر کرنے والا چینل کون سا ہے ؟
آپ ہی بتا دیں کہ وہ کون سا چینل ہے جس نے قائد اعظم رحمتہ الله علیہ کی زیارت میں موجود ریزیڈنسی کو آگ لگانے کا ذمہ دارآئی ایس آئی  کوٹھہرایا ؟ 
آپ ہی بتا دیں کہ وہ کون سا چینل ہے جس نے اپنے ایک ورکر کے زخمی ہونے کا الزام اس ملک کی خفیہ ایجنسی آئی ایس آئی پر لگا کر اس کے چیف کی تصویر آٹھ گھنٹے تک ٹی وی پر چلائی ؟ اس سے دنیا بھر میں پاکستان کی جو جگ ہنسائی ہوئی وہ تو ہوئی بلکہ آپکے چینل کی شہ پر انڈیا نے بھی اسکا ذمے دارآئی ایس آئی کو قرار دے دیا ۔ اور تو اور انڈیا کے ایک سابق وزیر نے آپکے اس چینل کی ہمدردی میں نواز شریف حکومت کو خط تک لکھ دیا اور اسی کی وجہ سے ایک وزیر نے وہاں پریس کانفرنس کر کےآئی ایس آئی کی مذمت کر دی۔
جناب بات تو ثبوت کے ساتھ ہوتی ہے بنا ثبوت کے کسی پر الزام لگانا واقعی غلط ہے ۔
آپ کا ہی چینل تھا جس نے الیکشن کے دن گنتی مکمل ہونے سے قبل ہی نواز شریف کو وزیر اعظم بنا دیا تھا۔
آپکے چینل کا سب سے بڑا جرم یہی ہے کہ اس نے نواز شریف کے ساتھ ملی بھگت اور ساز باز کر کے اس ملک میں دھاندلی کو فروغ دیا۔
عباسی صاحب ایک بات یاد رکھیئے گا کہ کوئلوں کی کان میں کام کرنے سے منہ ہمیشہ ہی کالا ہوتا ہے۔
بہتر ہوتا کہ آپ اپنے ادارے کے کرتوت جان کر اسے بے نقاب کرتے اور اس سے علیحدہ ہو جاتے لیکن منافقت اور ڈھیٹ پن کی حد یہ ہے کہ آپ ابھی تک اسکی حق میں وضاحتیں پیش کر رہے ہیں۔
شرم تم کو مگر آتی نہیں ۔
اب آتے ہیں صحافت کےعلمبردار جناب سلیم صافی صاحب کی طرف ۔
سلیم صافی صاحب اپنے مخصوص لہجے میں جب اپنے پروگرام جرگہ میں بولتے ہیں تو یقین کریں لگتا ہے کہ ان سا جہاندیدہ اور ایماندار شخص صحافت کی دنیا میں ہی نہیں ۔
انہوں نے فرمایا ہے کہ عمران خان کو مشہور کرنے والا چینل ہی جیو ہے۔
ارے واہ صافی صاحب واہ کمال کر دیا آپ نے تو۔
جب عمران خان نے ورلڈ کپ جیتا تو تب جیو کا نام و نشان تک نہیں تھا۔
جب شوکت خانم ہسپتال بنا تب جیو پیدا بھی نہیں ہوا تھا۔
جناب عالی عمران خان کو شہرت الله نے دی ہے اسکی ایمانداری حب الوطنی اور سچائی اور ہمت کی وجہ سے۔
جناب جس وقت عمران خان شہرت کی بلندیوں پر تھا اس وقت آپ افغانستان میں امریکہ سے پیسے لے کر روس کے خلاف لڑ رہے تھے (جس کا انکشاف اور اعتراف آپ نے خود فرما دیا ہے)۔
جناب آپ نے فرمایا کہ میرخلیل الرحمان فاونڈیشن نے عمران خان کے ساتھ مل کر سیلاب زدگان کی مدد کی۔ 
تو جناب اچھا کام کیا اسکے لیئے تعریف ہی ہے۔
تو جناب ایک بات بتائیں کہ جب زلزلہ آیا تھا تب امریکہ کے چینوک ہیلی کاپٹرز نے مظفر آباد میں امریکی میرین کے ساتھ پاکستانی عوام کی مدد کی تو کیا ہم اس ایک بدلے میں ان کو اجازت دیں کہ وہ ڈرون حملے جاری رکھیں ؟
جناب زلزلہ کے دنوں میں انگلینڈ کے کھلاڑیوں مائیکل وان اور اینڈریو فلینٹوف نے خود جا کر زلزلہ زدگان کی مدد کی تو کیا پاکستانی ٹیم ان سے اس مہربانی کی وجہ سے میچ ہار جاتے ؟
جناب عالی احسان فراموشی عمران خان کے خون میں نہیں ہے بلکہ آپ اپنے بارے میں کیا فرمائیں گے کہ ایک وقت تھا کہ آپ امریکہ سے پیسے لے کر افغانستان میں روس کے خلاف جنگ لڑ رہے تھے اور آج آپ طالبان کو دہشت گرد کہہ رہے ہیں ؟
اسکا مطلب ہے کہ آپ بھی ایک دہشت گرد تھے ؟
ذرا اپنے گریبان میں جھانک کر دیکھیں آپکو وہاں صرف بغض منافقت اورانا پرستی ہی نظرآئے گی۔اگر یہ نہ ہوتی تو آپ کم از کم اپنے ایک کالم میں ہی خیبر پختونخوا میں ہونے والی مثبت تبدیلی جیسے کرپشن میں کمی پولیس کا غیر سیاسی نظام صحت اور تعلیم کے شعبے میں ہونے والے کاموں کا ذکر کرتے۔لیکن کیا کریں جناب حق اور سچ بات لکھنا اور بولنا شاید آپکو آتا ہی نہیں۔
اب آتے ہیں جناب عامر لیاقت صاحب کی طرف۔
یہ وہ صاحب ہیں جو کہ اپنے آپ کو ڈاکٹر کہلواتے ہیں حالانکہ ان صاحب کی ڈگری جعلی ثابت ہو چکی ہے۔ .
یہ صاحب فرماتے ہیں کہ عمران خان نے حامد میر کے ساتھ اچھا نہیں کیا کیوں کہ حامد میر نے سب سے پہلے جا کر خان صاحب کے بارے میں شوکت خانم ہسپتال میں پروگرام کیا تھا جب وہ لفٹر سے گرے تھے ۔
تو جناب آپ کو یاد نہیں کہ عمران خان وہ سب سے پہلا سیاسی لیڈر ہے جس کی جانب سے سب سے پہلے حامد میر پر حملے کی مذمت کی گئی تھی ؟ اور کل بھی انہوں نے ایک دو پروگراموں میں حامد میر کی تعریف کی کہ وہ ایک بہترین صحافی ہے۔
آپ سب حضرات نے مل کر عمران خان کو تختہ مشق بنا لیا ہے اس کا قصور صرف اتنا ہے کہ اس نے دھاندلی کے خلاف بات کی ہے اس لیئے ؟ تو جناب عامر لیاقت صاحب آپ اپنے بارے میں کیا کہیں گے ؟ دنیا آپکو ایک سکالر کے طور پر نہیں بلکہ ایک نوٹنکی کے طور پر جانتی ہے۔ کیا آپ اس "غالب" والی  ویڈیو کو بھول گئے ہیں جو کچھ عرصہ پہلے ریلیز ہوئی تھی اور وہ اصلی ثابت ہوئی تھی ؟
اس میں اپنی زبان اور آپکی اخلاقیات اور آپکی تہذیب ہو چیز صاف دکھائی دیتی ہے۔
عامر لیاقت صاحب آپ تب ایک دوسرے چینل پر تھے اور آپ نے فرمایا تھا کہ یہ ویڈیو جنہوں نے ریلیز کی ہے وہ جھوٹے مکار دھوکے باز اور بلیک میلر ہیں۔تو جناب آپ پھر آج اسی چینل پر ہیں جس کو آپ نے مکار دھوکے باز اور بلیک میلر کہا تھا۔
اسکا مطلب یہ ہوا کہ آپ اس چینل کا حصہ بن چکے ہیں ؟
ویسے آپ واقعی بہت ڈھیٹ قسم کے انسان ہیں کہ ابھی تک اپنے نام کے ساتھ ڈاکٹر لگاتے ہیں۔جہاں جس ملک میں آپ جیسے لوگوں کو مذہبی سکالر اور عالم سمجھا جائے اس ملک میں اسلام اور اخلاقی اقدار کا الله ہی حافظ ہے۔
آپ ایک بہترین اداکار اور فنکار تو ہو سکتے ہیں لیکن معذرت کے ساتھ آپ مذہبی سکالر انہیں ہو سکتے۔
آخر میں صرف اتنا ہی عرض کروں گا کہ:
آپ صحافی حضرات کی بد عنوانیوں ، منافقت اور کرپشن کو دیکھ کر لگتا ہے کہ آپ صحافت میں قدم رکھنے سے پہلے شاید یہی حلف لیتے ہیں کہ ۔
جو کہوں گا جھوٹ کہوں گا ، جو لکھوں گا بغض اور ذاتی عناد پر مبنی مواد لکھوں گا۔

اور جو کچھ کروں گا منافقت اور بد دیانتی کی انتہا پر جا کر کروں گا۔
.
.
The writer is a social media activist and ardent PTI supporter from Sialkot (currently in Italy) and tweets at @Sialkotian786 . (No official association with PTI).

....................

Disclaimer: This blog is not an official PTI webpage and is run by a group of volunteers having no official position in PTI. All posts are personal opinions of the bloggers and should, in no way, be taken as official PTI word.
With Regards,
"Pakistan Tehreek-e-Insaf FATA Volunteers" Team.


No comments:

Post a Comment